پاک فوج کے میجر کا تیسری جماعت کے بچے پر بدترین تشدد، پاکستانیوں نے کارروائی کا مطالبہ کردیا


اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)افواج پاکستان سے ہر پاکستانی کی محبت کی مثال نہیں ملتی لیکن بدقسمتی سے کچھ افراد کے منفی رویے ادارے کیلئے بدنامی کا باعث بنتے ہیں ۔ ایک واقعہ ڈیرہ اسماعیل خان میں پیش آیا ایک میجر نے بچے پر تشد کیا ہےتشدد کی تصاویر سوشل میڈیا پر وائرل ہو گئیں ہیں جس پاکستانیوں نے پاک فوج سے میجر کیخلاف ایکشن لینے کی درخواست کی ہے ۔آئی سرجن ڈاکٹر توصیف نے متاثرہ بچے کی تصاویر اور ویڈیو سوشل میڈیا پر شیئر کیا ہے جس میں دیکھا سکتا ہے کہ ایک شخص نے فوجی وردی میں ملبوس ڈیر اسماعیل خان کے
درابن روڈ پر موجود سٹی سکول میں جا کر بچے پر تشدد محض صرف اس بنا پر کیا کہ اس کے بچے کی متاثرہ بچے کیساتھ لڑائی ہو ئی تھی جس کا بدلہ لینے کیلئے بہادر فوج جوان اپنی بیگم کے ہمراہ سکول پہنچا اور مطلوبہ بچے کو بلوا کر اس پر تشدد کیا ہے ۔ جبکہ بہادر فوجی جوان کی اہلیہ نے بھی دلیر ی دکھانے میں کوئی کسر نہ چھوڑی ، بچے کو گندی گالیاں دیتی رہی ۔ جب متاثرہ بچے سے پوچھا گیا تو اس نے بتایا کہ مجھے آرمی وردی میں ملبوس شخص نے تشدد کیا اور ان کیساتھ آئی آنٹی نے مجھے گندی گندی گالیاں بھی دی۔ ویڈیو اور تصاویر سوشل میڈیا پر وائرل ہونے کے بعد پاکستانی قوم نے فوجی افسر کیخلاف پاک فوج سے مطالبہ کیا اس کے ساتھ سخت کاروائی کی جائے ۔ڈاکٹر توصیف نے تصاویر کو سوشل میڈیا پر ڈالتے ہوئے ساتھ لکھا ہے کہ ’’تصویر میں موجود اس شخص نے فوجی وردی میں ایک بچے پر اسکول میں جا کر اس لیے تشدد کیا کیوں کہ اسکے بیٹے کی اور اس بچے کی آپس کی لڑائی ہوئی تھی جسکا بدلہ لینے ڈیرہ اسماعیل خان کا یہ بہادر اپنی بیگم کے ہمراہ سٹی اسکول جا پہنچا اور بچے کو بلوا لیا ۔ہماری قابل فخر فوج میں اگر کچھ غلط سوچ کے ایسے لوگ ہیں تو انکے خلاف فوجی قانون کے مطابق کاروائی ہونی چاہیے کیوں کہ انکی وجہ سے امیج خراب ہوتا !انکی بیگم صاحب نے تو ماں بہن کی گالیاں دیںجبکہ بہادر باپ نے تیسری کلاس کے بچے کو تھپڑوں اور لاتوں سے مارا اور تصویر میں واضح دیکھا جا سکتا کے یہ وحشیانہ مار تھی ۔بھائیو اگر ہم کالی وردی میں موجود کچھ غلیظ لوگوں کے خلاف احتجاج کر سکتے ۔۔ سفید کوٹ میں ڈاکٹرز کو بدنام کرنے والے کچھ عناصر بےنقاب کر سکتے تو پھر خاکی وردی میں اس وحشی انسان کو بھی سب کے سامنے لائیں ۔ہم اپنی فوج سے بہت پیار کرتے اور آعلیٰ افسران سے فوجی وردی کا غلط استعمال کرنے پر میجر ارباب کو سزا دینے کا مطالبہ کرتے ! کسی کو بدمعاشی کا کوئی حق نہیں۔

loading…





Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *