اقراء – کیا بیوی کسی دوسرے کے بچے کو دودھ پلا سکتی ہے؟ – Magazine

آپ کے مسائل اور اُن کا حل

سوال:۔ ایک طلاق یافتہ عورت ہے، وہ کسی سے نکاح کرلیتی ہے ،مگر کسی اورکے بچے کو دودھ پلانے کا معاہدہ بھی کیے ہوئے ہے۔اس معاہدے کی شرعی حیثیت کیا ہے اور شوہر کس حد تک اس میں مداخلت کا مجاز ہے؟

جواب:۔ (1)اگر بیوی نے نکاح سے قبل کسی بچے کو دودھ پلانے کا معاہدہ کیا ہے تو شوہر معاہدہ ختم کرنے یا بیوی کو معاہدے کی تعمیل سے روکنے کا مجاز نہیں۔

(2) اگر بیوی نے نکاح کرنے کے بعد شوہر کی رضامندی سے دودھ پلانے کا معاہدہ کیا ہے تو بھی معاہدے کی پاس داری لازم ہے۔

(3) اگر بیوی نے نکاح کے بعد بلااجازت ِشوہر معاہدہ کیا ہے تو معاہدہ درست نہیں اور شوہر کو فسخ معاہدہ کا حق حاصل ہے۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں

مولاناڈاکٹرعبدالرزاق اسکندر سے مزید

اقراء سے مزید

مسائل سے مزید




Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*