اقراء – روزے کی حالت میں سرمہ،کاجل، کریم ،لپ اسٹک وغیرہ کااستعمال کیسا ہے؟ – Magazine


آپ کے مسائل اور اُن کاحل


سوال:۔
میں نے اکثر لوگوں کو کہتے سنا ہے روزے کی حالت میں لپ اسٹک ، کاجل/سرمہ، سر کے بالوں میں تیل اور ہاتھوں اور جلد پر کریم یا لوشن وغیرہ استعمال نہیں کرنا چاہیے، کیوں کہ یہ جسم میں جذب ہوجاتے ہیں، اگر ایسا کیا جائے تو روزہ ٹوٹ جاتا ہے اور یہ بھی سنا ہے کہ روزے کی حالت میں بال وناخن نہیں کاٹ سکتے ،اس سے دین میں منع فرمایا گیا ہے، کیا یہ باتیں صحیح ہیں ؟

جواب:۔ روزے کی حالت میں اگربدن کے مسامات کے ذریعے کوئی چیز جسم میں داخل ہوتو اس سے روزہ فاسد نہیں ہوتا، لہٰذاان چیزوں کے استعمال کے باوجود روزہ درست ہے، تاہم لپ اسٹک لگانے سے احتیاط کرنی چاہیے، کیونکہ اس کے اجزا ءکا منہ میں جانے کا خطرہ رہتا ہے۔روزے کی حالت میں بال وناخن کاٹ سکتے ہیں، اس میں کوئی حرج نہیں ہے۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں

مولاناڈاکٹرعبدالرزاق اسکندر سے مزید

اقراء سے مزید

مسائل سے مزید





Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *